8

نیا پاکستان ہاﺅسنگ منصوبے کا مقصد بے گھر افراد کوگھر مہیا کرناہے ، وزیر اعظم عمران خان

اسلام آباد (نمائندہ خصوصی)وزیر اعظم عمران خان نے کہاہے کہ نیا پاکستان ہاﺅسنگ منصوبے کا آغاز ہورہاہے، اس مقصد بے گھر افراد کوگھر مہیا کرناہے ، گھر کی قیمت اتنی ہوگی کہ جو ہمارا کمزور طبقہ خرید سکے ، قرعہ اندازی کے ذریعے دس ہزار گھر نکلیں گے اورڈیڑھ سال کے اندر ہم لوگوں کو گھر دے چکے ہیں ہونگے ، یہ گھر ان لوگوں کیلئے ہونگے جو پیسے سے خرید نہیں سکتے ۔اسلام آباد میں نیا پاکستان ہاﺅسنگ منصوبے کی کی افتتاحی تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیر اعظم نے کہا کہ شہروں میں کچی بستیاں ہیں جہاں لوگ برے حالات میں رہتے ہیں ، ہم نجی شراکت داری سے مل کر آدھی زمین کمرشل سیکٹر بنانے کیلئے دے دیں گے اور آدھی زمین پر جتنے بھی غریب لوگ ہیں ان کیلئے گھر بنادیں گے ۔ ان کا کہنا تھا کہ اسلام آباد میں دو کچی آبادیاں ہیں ، ان کیلئے ڈویلپرز سے بات کی جارہی ہے ، مقصد صرف یہ ہے ابھی تک صرف پیسے والے لوگ گھر بناسکتے تھے ، اگر پیسے نہیں تو ایک عام شخص گھر نہیں لے سکتا تھا ۔ ان کا کہنا تھاکہ پچاس لاکھ گھر بنانے کا مقصد یہ ہے کہ پولیس والے اور سرکار ی ملازم جو اپنے گھر نہیں بنا سکتے ، وہ چھوٹی چھوٹی قسطیں دے کر اپنے گھر بنا سکیں۔ ان کا کہنا تھا کہ بینک لوگوں کو گھر بنانے کیلئے قرض نہیں دیتے ، پاکستان میں قانون نہیں ہے ، ہندوستا ن میں دس فیصد لوگ بینکوں سے قرض لے کر گھر بناتے ہیں جبکہ پاکستان میں 0.2فیصد لوگ گھر بینک سے قرض لیکر گھر بناتے ہیں۔ ہم اس کے لئے قانون سازی کر رہے ہیں ، پاکستان میں لوگ باہر سے بھی اس سکیم میں سرمایہ کاری کرنے کیلئے آرہے ہیں ، ہم یہ سکیم پورے پاکستان میں لیکر جائیں گے ۔ وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ جو لوگ گھر بنانے سے متعلق سوچ بھی نہیں سکتے تھے ، ان کوبھی ان کی تنخواہ اور مزدوری میں سے گھربنانے کا پورا پورا موقع ملے گا ۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں