23

سعودی دارالحکومت ریاض میں اسلامی فوجی اتحاد برائے انسدادِ دہشت گردی کے زیر اہتمام آئی ایم سی ٹی سی کے ہیڈکوارٹر میں انسدادِ دہشت گردی کے خلاف دوسرے ماہانہ سیمینار کا انعقاد کیا گیا

الریاض (آصف رضا) سعودی دارالحکومت ریاض میں اسلامی فوجی اتحاد برائے انسدادِ دہشت گردی کے زیر اہتمام آئی ایم سی ٹی سی کے ہیڈکوارٹر میں انسدادِ دہشت گردی کے خلاف دوسرے ماہانہ سیمینار کا انعقاد کیا گیا جس میں پاکستان، سعودی عرب، عمان، بحرین ،کویت ،متحدہ عرب امارات اور مصر سمیت سولہ ممالک کے وفد، اراکین اور آئی ایم سی ٹی سی کے ملازمین نے بھی شرکت کی.

پاکستان، متحدہ عرب امارات اور سعودی عرب سے تین ریسرچ سینٹرز اس سیمینار میں شامل ہوئے…

پاکستان کی جانب سے سیمینار میں سابق سفیر نائب ایڈمرل (ریٹائرڈ ) اور اسلام آباد پالیسی ریسرچ انسٹیٹیوٹ کے صدر خان ھشام بن صدیق نے دہشت گردی کے خلاف روایات کی ترقی کے لئے اسلام آباد پالیسی ریسرچ انسٹیٹیوٹ کی بھرپور حمایت کی یقین دہانی کروائی اور دہشت گردوں کی حکمت عملی کی وضاحت بھی کی.
انہوں نے کہا کہ سیمینار کا مقصد پاکستان اور سیکیورٹی اداروں کی انتہا پسندوں کے خلاف نظریاتی سطح پر بنائی گئی حکمت عملی کے بارے میں لوگوں کو روشناس کروانا ہے..

سیمینار میں انہوں نے دہشت گردی کے خلاف 5000 امام کی جانب سے دیئے گئے فتویٰ، پیغام پاکستان کی بھی وضاحت کی..

خان ھشام بن صدیق نے مزید کہا کہ پاکستان اب اپنی مسلح افواج کی مدد سے دہشت گردی پر قابو پانے میں کافی حد تک کامیاب ہو چکا ہے..
سیمینار میں مختلف ممالک کے نمائندگان نے انسدادِ دہشت گردی کے دائرہ اقتدار میں حاصل ہونے والے اپنے تجربات بھی شئر کئیے..

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں