26

ہمارامعاشرہ اور ہم تحریر ملک عبدالرحمان فریدی

خصوصی تحریر……..ملک عبدالرحمان فریدی

عنوان :ہمارامعاشرہ اورہم

کوئی جتنا بھی بااخلاق ، دیندار ہو حیاء کا پیکر نظر آئے پھر بھی ٹیوشن پڑھانے والے استاد کو گھر میں اپنی جوان بیٹی کے ساتھ تنہائی میں 10 منٹ کیلئے بھی اکیلے کمرے میں مت چھوڑنا.

رسالت مآب صلی اللہ علیہ وسلم کا فرمان ہے کہ دو غیر محرم کا تنہائی میں ملنا تیسرا انکے بیچ شیطان ہوتا ہے

یہ معمول کی بات ہے کہ ہم لوگ ٹیچر پر اندھا اعتماد کر کے اپنی بچیوں کو ان کے پاس اس لئے اکیلا چھوڑ دیتے ہیں یہ سمجھ کر کہ استاد تو باپ کا درجہ رکھتا ہے لیکن ہمارے ہاں ایسے بیسیوں واقعات ملیں گے کہ…
استاد اپنی طالبہ کو لے کر فرار
طالب علم اپنی ٹیچر کے عشق میں گرفتار.

اردگرد ماحول میں جو جو ہو رہا ہے اس قسم کے واقعات سے آپ بخوب واقف ہونگے
الغرض
بہت سے لوگ اس بات کو معمولی بات سمجھتے ہیں اور روشن خیالی کی انتہاء یہاں ختم ہو جاتی ہے جب والدین کہتے ہیں اس کمرے میں کوئی نہ پھٹکے استاد اسکو پڑھا رہا ہے ہماری بیٹی کی تعلیم میں خلل آئے گا .

آخر میں والدین سے یہ گزارش کروں گا کہ اتنا روشن خیال اور دین سے دور نہ ہوں کہ آپکی بیٹی کا کوئی ایسا قدم باپ کی پگڑی اتار دے بھائی کی نظریں جھکا دے ماں کے کردار پر کوئی انگلی اٹھا دے …

تعلیم ضرور بیٹیوں کو دلائیں مگر حدود و قیود کا خیال رکھ کر بیٹیوں کے معاملے میں پھوک پھوک کر قدم رکھیں یہ نہ ہو کہ کسی دن آپکی ہی بیٹی آپکی جھونپڑی کو پھوک کر راکھ کر دے

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں