41

مورو کے قریب یونین کائونسل خیرواہ کے گائوں اللہ بخش چانڈیو عرف جمعو خان چانڈیو کے پرائمری بوائز اسکول میں اساتذہ کی کمی اور فرنیچر کی کمی کے خلاف گائوں والے والدین طلبہ و طالبات سیاسی سماجی علمی ادبی سول سوسائٹی کے رہنماء اور کارکن سراپااحتجاج

مورو رپورٹ تیمور احمد راجپوت 03002370637
مورو کے قریب یونین کائونسل خیرواہ کے گائوں اللہ بخش چانڈیو عرف جمعو خان چانڈیو کے پرائمری بوائز اسکول میں اساتذہ کی کمی اور فرنیچر کی کمی کے خلاف گائوں والے والدین طلبہ و طالبات سیاسی سماجی علمی ادبی سول سوسائٹی کے رہنماء اور کارکن سراپااحتجاج بن کر روڈ پر نکل آئے سید طالب حسین شاھ شاہنواز علی چانڈیو عبدالحلیم چانڈیو محمد قاسم چانڈیو عبدالواحد چانڈیو شاہجہان چانڈیو لال بخش چانڈیو اسامہ میر چانڈیو محمد کامل لغاری عابد عطا مصطفی چانڈیو اور دیگر نے اسکول کے آگے مورو وایا قمرالدین چانڈیو لنک روڈ پر احتجاجی مظاہرہ کر کے دھرنا دیا اس موقع پر مظاہرین نے مورو نیشنل پریس کلب کے صحافیوں کو شکایات کرتے ہوئے بتایا کے سندھ حکومت تعلیم کے حوالے سے سنجیدہ کردار ادا نہیں کر رہی ہے تعلیم میں ایمرجنسی اور سدہارے لانے کی باتیں صرف باتیں ہی رہ گئی ہیں اس پر سندھ میں کوئی عمل نہیں ہورہا ہے ہمارے گائوں میں دوسو سے زائد بچوں اور بچیوں کو تعلیم دینے کیلیئے صرف دو ٹیچر مقرر تھے جن میں سے بھی ایک ٹیچر کو بااثر لوگوں کی فون پر من پسند جگہ پر تبادلہ کردیا گیا ہے جس کی وجہ سے ہمارے بچوں۔کی تعلیم مکمل تباہ ہورہی ہے اس کے علاوہ اس جدید دور میں بھی ہمارے بچے اور بچیاں اسکول میں فرنیچر نہ ہونے کی وجہ سے زمین پر بیٹھ کر تعلیم حاصل کرنے پر مجبور ہیں مگر حکومت تعلیم کو سدھارنے کے بجائے صرف بیان بازی اور فوٹو سیشن تک محدود ہے گائوں اللہ بخش چانڈیو کے مکینوں اور والدین نے وزیر اعلی سندھ سیکریٹری تعلیم سندھ چیف سیکریٹری سندھ ڈائریکٹرایجوکیشن شہید بینظیرآباد ڈپٹی کمشنر نوشہروفیروز اسسٹنٹ کمشنر مورو ڈی ای او ایجوکیشن نوشہروفیروز ٹی ای او ایجوکیشن تحصیل مورو سے پر زور مطالبہ کیا ہے کہ ہمارے گائوں کے اسکول میں کم سے کم پانچ ٹیچر مقرر کر کے ہمارے بچوں کا مستقبل تباہ ہونے سے بچایا جائے دوسری صورت میں ہم سخت سے سخت احتجاج کریں گے جس کی ذمیواری تعلیم ایجوکیشن کھاتے والوں پر ہوگی

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں