7

لاہور ہائیکورٹ،ٹیم میں سلیکٹ نہ ہونے پر پاکستانی کرکٹر کی درخواست پرہیڈکوچ سمیت پی سی بی حکام کو نوٹس جاری

لاہور (نمائندہ خصوصی)لاہور ہائیکورٹ نے قومی انڈر 19 کرکٹ ٹیم میں منتخب نہ ہونے پر کرکٹر زاکر خان کی درخواست پر ہیڈکوچ ، چیف سلیکٹر مصباح الحق اور پی سی بی حکام کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ میں ہیڈ کوچ مصباح الحق کے خلاف کیس کی سماعت ہوئی ، ہائیکورٹ کے جسٹس امیر بھٹی نے درخواست پر سماعت کی۔ درخواست گزار نے موقف اپنایا ہے کہ اسلام آباد ریجن انڈر 19 ٹیم کیلئے 60 بچوں میں سے 20 کا انتخاب ہوا، 20 بچوں میں سے درخواست گزار 7 ویں نمبر پر آیا۔کرکٹر زاکر خان نے اپنی درخواست میں لکھا کہ پی سی پی کے نئے آئین کے تحت علاقائی ٹیمیں ختم کر کے صوبائی سطح پر ٹیمیں بنانے کا قانون آگیا ہے۔

عدالت کو بتایا گیا کہ صوبائی سلیکشن کمیٹی نے قوانین کے برعکس رسمی سے ٹرائل کروا کے ٹیم منتخب کی۔سلیکشن کمیٹی کی جانب سے زاکر خان کو نظر انداز کر کے مسترد کر دیا گیا جبکہ درخواست گزار کا گزشتہ ریکارڈ دیگر منتخب کیے جانے والے لڑکوں سے کئی گنا بہتر ہے۔عدالت سے استدعا کی گئی ہے کہ علاقائی سطح پر بنائی گئی ٹیموں کو بحال کرنے اور سلیکشن کمیٹی کے فیصلے کو کالعدم قرار دیتے ہوئے میرٹ پر ٹرائل کروانے کا حکم دے،درخواست میں چیئرمین پی سی پی، وزیراعظم پاکستان اور ڈائریکٹر نیشنل اکیڈمی قذ افی سٹیڈیم سمیت دیگر متعلقین کو فریق بنایا ہے۔

عدالت نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ کسی کھلاڑی کوکھیلانا یا نہ کھیلاناعدالت کاکام نہیں،عدالت نے ہیڈکوچ ، چیف سلیکٹر مصباح الحق اور پی سی بی حکام کو نوٹس جاری کرتے ہوئے جواب طلب کر لیا۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں